Talks with Anti Corona Vaccine and Quran | اینٹی کورونا ويكسين اور قرآن کریم سے گفتگو

Talks with Anti Corona Vaccine and Quran | اینٹی کورونا ويكسين اور قرآن کریم سے گفتگو


Talks with Anti Corona Vaccine and Quran | اینٹی کورونا ويكسين اور قرآن کریم سے گفتگو
SYMPTOMS

پوچھا:اس منحوس کرونا 19 وائرس سے دنیا کب نجات حاصل کر سکے گی کہا:أَيَّامًا مَّعْدُودَاتٍ
بس کچھ دنوں میں .(بقره ايه 184)
پوچھا : ڈاکٹر اور حکما صاحبان صرف نصیحتیں اور نسخے دیتے رہتے ہیں.
 کہا: وَلَا يُنَبِّئُكَ مِثْلُ خَبِيرٍ .
جاننے والے سے بہتر جانکاری کوئی نہیں دے سکتے ہیں. (فاطر آیه ١٤)
پوچھا : صحت عامہ محکموں کی نصیحتوں اور احکامات کا کیا کروں؟
 کہا:وَاسْمَعُوا وَأَطِيعُوا
انکی سنو اور اطاعت کرو (تغابن آیه ١٦)

Talks with Anti Corona Vaccine and Quran

پوچھا: اس منحوس کرونا سے بچنے کے لئے کیا کروں؟
 کہا: وَقَرْنَ فِي بُيُوتِكُنَّ
اپنے گھروں میں محصور ہو کر آرام سے رہو. (احزاب آیه٣٣)
بُيُوتًا آمِنِينَ
(ایسے) گھر جو حفاظت کے اعتبار سے قابل اطمینان ہوں. (حجر آیه ٨٢)
 پوچھا: یعنی اس بیماری سے بچنے کے لئے عمومی صحت و صفائی لازمی ہے لیکن اپنی سلامتی کے لئے کیا کروں؟
 کہا: فَاغْسِلُوا وُجُوهَكُمْ وَأَيْدِيَكُمْ
اپنے چہرے اور ہاتھوں کو دھو لو. (مائده آیه ٦)
پوچھا : ہمارے کپڑے بھی تو بیماری پھیلا سکتے ہیں ان کا کیا کروں؟
 کہا: وَثِيَابَكَ فَطَهِّرْ
اور اپنے کپڑوں کو صاف و پاک کرو.(مدثر آیه٤)
 پوچھا : کیا غیر ضروری کام کے لئے گھر سے باہر نکل سکتا ہوں؟
 کہا:وَلَا تُلْقُوا بِأَيْدِيكُمْ إِلَى التَّهْلُكَةِ.
اپنے آپ کو خود ہی ہلاکت میں نہیں ڈالو. (بقره آیه١٩٥)
پوچھا: اگر کسی میں تپ و لرزہ یا سانس لینے میں مشکل دیکھوں اس کو کیا سمجھوں؟
 کہا: وَهُوَ سَقِيمٌ
وہ بیمار ہے .(صافات١٤٥)
پوچھا: ایسے میں کیا کریں؟
 کہا: فَلَا تَقْرَبُوهَا
ان کے قریب مت ہونا. (بقره آیه١٨٧)

Talks with Anti Corona Virus Vaccine and Quran

پوچھا : لیکن یہ وائرس بیمار سے ہم میں کیسے منتقل ہو جاتا ہے؟
 کہا: تَخْرُجُ مِنْ أَفْوَاهِهِمْ
ان کے منہ سے نکلتا ہے. (کهف آیه٥)
 پوچھا : کیا ان دنوں رشتہ داروں اور دوستوں کو ملنے کے لئے جا سکتے ہیں؟
 کہا: لَا تَدْخُلُوا بُيُوتًا غَيْرَ بُيُوتِكُمْ.
نہیں اپنے گھر کے بغیر کہیں نہیں جاؤ. (نور آیه ٢٧)
پوچھا : کیا قرنطینه کے دنوں میں گھر والوں کے ساتھ خرید کرنے کے لئے گھر سے باہر نکل سکتے ہیں؟
 کہا : فَابْعَثُوا أَحَدَكُم بِوَرِقِكُمْ هَٰذِهِ إِلَى الْمَدِينَةِ فَلْيَنظُرْ أَيُّهَا أَزْكَىٰ طَعَامًا فَلْيَأْتِكُم بِرِزْقٍ مِّنْهُ
ایسے میں کوئی ایک پیسے لے کے بازار چلا جائے اور (جس دکان پر) صحیح و سالم غذا ہو خرید کرکے لے آئے اسے کھائیں.(کهف آیه ١٩)
پوچھا: کچھ لوگ صحت و صفائی سے متعلق نصیحتوں اور احکامات کو رعایت کیوں نہیں کرتے ہیں؟
 کہا: ذَٰلِكَ بِأَنَّهُمْ قَوْمٌ لَّا يَفْقَهُونَ
کیونکہ وہ ایسے لوگ ہیں جو نہیں سمجھتے ہیں.(حشر آیه١٣)
 پوچھا : ہم کیا کریں؟
 کہا: وَلَا تَمَسُّوهَا
انہیں مت چھو لیں.(اعراف ایه ٧٣)
 فَلَا تَقْعُدُوا مَعَهُمْ
ان کے ساتھ مت بیٹھیں.(نساء١٤٠)
پوچھا: کیا قرنطینه میں رہنے اور صحت و صفائی کا خیال رکھنے سے ہماری ان دنوں کی مشکل آسان ہوجائے گی؟
کہا: فِيهِ شِفَاءٌ لِّلنَّاسِ
اس میں لوگوں کی شفا ہے.(نحل آیه ٦٩)

اینٹی کورونا ويكسين اور قرآن کریم سے گفتگو

پوچھا : اس طرح گھروں میں اور قرنطینه میں محصور رہنے سے ہمارے لئے اقتصادی مشکلات پیدا ہونگے غربت اور تنگدستی پیش آئے گی .
 کہا:وَإِنْ خِفْتُمْ عَيْلَةً فَسَوْفَ يُغْنِيكُمُ اللَّهُ مِن فَضْلِهِ.
اور اگر غربت اور تنگدستی سے ڈر رہے ہو الله اپنے فضل و کرم سے آپ کو بے نیاز کر دے گا. (توبه آیه٢٨)
پوچھا : کچھ ایسے حالات میں جھوٹی خبریں پھیلا رہے ہیں جس سے لوگ پریشان اور ہمت ہار جاتے ہیں، یہ کون لوگ ہیں؟
 کہا: الْمُنَافِقُونَ وَالَّذِينَ فِي قُلُوبِهِم مَّرَضٌ وَالْمُرْجِفُونَ فِي الْمَدِينَةِ
منافقین اور وہ لوگ جن کے دلوں میں بیماری ہے شہروں میں پریشان کن جھوٹے افواہیں پھیلاتے ہیں. (احزاب آیه ٦٠)
پوچھا : کچھ لوگ کہتے ہیں کہ یہ وائرس عالمی استکباری طاقتوں نے اپنے حریفوں کو راستے سے ہٹانے کے لئے بنایا ہے.
 کہا : وَإِن تَصْبِرُوا وَتَتَّقُوا لَا يَضُرُّكُمْ كَيْدُهُمْ شَيْئًا إِنَّ اللَّهَ بِمَا يَعْمَلُونَ مُحِيطٌ
اور اگر صبر و تقوی سے کام لیں ان کی سازشیں آپ کو نقصان نہیں پہنچا سکتے ہیں، الله اس سب پر احاطہ رکھتا ہے جو کچھ وہ انجام دے رہے ہیں.(آل عمران آیه١٢٠)
پوچھا : آخر کار ہمیں اس تکلیف سے کون نجات دے گا؟
 کہا: اللَّهُ يُنَجِّيكُم مِّنْهَا وَمِن كُلِّ كَرْبٍ
الله آپ کو اس تکلیف اور ہر پریشانی سے نکال دے گا. (انعام آیه ٦٤)

اینٹی کورونا ويكسين اور قرآن کریم سے گفتگو

پوچھا : گھروں اور قرنطینه میں محصور ہو کر رہنے والے افراد کے ساتھ کیسا سلوک کریں؟
 کہا: وَعَاشِرُوهُنَّ بِالْمَعْرُوفِ
ان کے ساتھ نیکی کے ساتھ پیش آئیں. (نساء آیه١٩)
 وَلْيَتَلَطَّفْ
لطف و کرم کا مظاہرہ کریں.(کهف آیه ١٩)
پوچھا : ہمیں اپنے ساتھیوں کے ساتھ کیسا سلوک کرنا چاہئے؟
کہا:قُولُوا لَهُمْ قَوْلًا مَّعْرُوفًا
ان کے ساتھ شائستگی کے ساتھ بات کریں.(نساء آیه٥)
پوچھا : اگر گھر میں بیٹھے بیٹھے آپس میں تو تو میں میں ہوا تو ایسے میں کیا کریں؟
 کہا: وَلْيَعْفُوا وَلْيَصْفَحُوا أَلَا تُحِبُّونَ أَن يَغْفِرَ اللَّهُ.
چاہئے کہ معاف اور درگذر کریں؛ کیا آپ نہیں چاہتے ہو کہ الله تمہیں معاف کرے؟(نور آیه ٢٢)
پوچھا : گھر میں بیٹھے بیٹھے وقت کیسے اچھی طرح گزاروں؟
 کہا: وَاذْكُر رَّبَّكَ كَثِيرًا وَسَبِّحْ بِالْعَشِيِّ وَالْإِبْكَارِ.
بہت زیادہ اپنے پروردگار کو یاد کرو اور صبح و شام اسکی تسبیح بجا لاو.(آل عمران آیه٤١)
وَمِنَ اللَّيْلِ فَتَهَجَّدْ بِهِ نَافِلَةً لَّكَ
اور رات کو نماز شب اور عبادت و بندگی کرنے کے لئے بیدار رہنا. (اسراء آیه ٧٩)
اقْرَأْ كِتَابَكَ
کتاب پڑھنا.(اسراء آیه ١٤)
پوچھا؛ گھروالوں کے ساتھ بیٹھے بیٹھے کیا کریں؟
کہا: فَاقْرَءُوا مَا تَيَسَّرَ مِنَ الْقُرْآنِ
جو کچھ قرآن میں تمہارے لئے پڑھنا آسان ہے وہ پڑھیں.(مزمل آیه ٢٠)
كُلُوا مِنَ الطَّيِّبَاتِ وَاعْمَلُوا صَالِحًا
پاکیزہ اور حلال پکوان کھائیں اور صالح کاموں کو انجام دیں. (مؤمنون آیه ۵۱)
پوچھا؛ لگتا ہے کہ تمہاری سفارشات پر عمل کرنے سے گھر والوں کے ساتھ اچھی طرح سے دن گزریں گے؟
کہا: رَحْمَتُ اللَّهِ وَبَرَكَاتُهُ عَلَيْكُمْ أَهْلَ الْبَيْتِ إِنَّهُ حَمِيدٌ مَّجِيدٌ
تم پر اور تمہارے گھر والوں پر الله کی رحمت و برکات ہوں یقیناً وہ حمید و مجید ہے. .(هود آیه ٧٣)

اینٹی کورونا ويكسين اور قرآن کریم سے گفتگو

پوچھا : ان دنوں مدافعان سلامت اور صحت عامہ محکموں پر انسانی جانیں بچانے کے لئے بڑی زمہ داریاں عائد ہیں.
 کہا:مَنْ أَحْيَاهَا فَكَأَنَّمَا أَحْيَا النَّاسَ جَمِيعًا.
اور جس کسی نے بھی انسان کو بچایا گویا اس نے سبھی انسانوں کو بچایا ہے. (مائده آیه ٣٢)
پوچھا :ان کی جان توڑ کوشش کے بارے میں کیا کہتے ہو؟
 کہا: كُتِبَ لَهُم بِهِ عَمَلٌ صَالِحٌ إِنَّ اللَّهَ لَا يُضِيعُ أَجْرَ الْمُحْسِنِينَ
ان کی صالح عمل ان کے نامہ اعمال میں ثبت کئے جائیں گے، کیونکہ الله نیکی کرنے والوں کے انعام کو ضائع نہیں ہونے دیتا ہے .(توبه آیه١٢٠)
پوچھا : کچھ ڈاکٹروں اور پرستاروں نے کرونا سے بچانے کے لئے اپنی جان گنوا دی اور الله کو پیارے ہو گئے.
 کہا:أُولَٰئِكَ هُمُ الصِّدِّيقُونَ وَالشُّهَدَاءُ عِندَ رَبِّهِمْ لَهُمْ أَجْرُهُمْ
وہ الله کی بارگاہ میں صدیقین و شہداء ہیں اور ان کے لئے ان کا انعام ہے.(حدید آیه ١٩)

اینٹی کورونا ويكسين اور قرآن کریم سے گفتگو

پوچھا : منحوس کرونا شیطان پر غالب آنے کے لئے صحت عامہ سے متعلق نکات رعایت کرنے اور گھروں میں محصور ہو کر رہنے کے علاوہ اور کوئی سفارش ہے؟
کہا :وَادْعُوهُ خَوْفًا وَطَمَعًا إِنَّ رَحْمَتَ اللَّهِ قَرِيبٌ مِّنَ الْمُحْسِنِينَ
اور بیم و امید کے ساتھ دعا کریں، یقیناً الله کی رحمت نیک افراد کے پاس ہے. (اعراف آیه٥٦)
پوچھا : کیا الله کی طرف سے ہماری مشکلیں آسان ہونے کے لئے ہماری دعائیں کارگر ہیں؟
کہا: مَا يَعْبَأُ بِكُمْ رَبِّي لَوْلَا دُعَاؤُكُمْ
اگر تمہاری دعائیں نہ ہوں میرا پروردگار بھی تمہاری توجہ نہیں کرے گا. (فرقان آیه ٧٧)
پوچھا :اس وبا کے چلتے اضطراب اور بے چینی بڑھتی جارہی ہے.
کہا: أَمَّن يُجِيبُ الْمُضْطَرَّ إِذَا دَعَاهُ وَيَكْشِفُ السُّوءَ
وہی( الله) تو ہے جسے جب مضطرب پکارے وہ اسکی دعا سنتا اور اسکی پریشانی کو دور کرتا ہے.(نمل آیه

Talks with Anti Corona Vaccine and Quran

٦٢)
پوچھا : کیا حضرت انسان سے کوئی گلہ یا شکایت ہے؟
کہا: وَإِذَا مَسَّ الْإِنسَانَ الضُّرُّ دَعَانَا لِجَنبِهِ أَوْ قَاعِدًا أَوْ قَائِمًا فَلَمَّا كَشَفْنَا عَنْهُ ضُرَّهُ مَرَّ كَأَن لَّمْ يَدْعُنَا إِلَىٰ ضُرٍّ مَّسَّهُ
اور جب انسان کو کوئی تکلیف و نقصان پہنچے تو ہم سے ہر حال میں مدد طلب کرتے اور جب تکلیف و نقصان کا علاج کریں تو ایسے ناشکری اور گناہ کا رخ کرتے ہیں گویا تکلیف و نقصان کا علاج کرنے کے لئے ہم سے مدد طلب نہیں کی ہو! (یونس آیه ١٢)
پوچھا : کیا ہمیں ایسی دعا سکھائیں گے جس سے الله کی بارگاہ میں اپنی غلطیوں اور کوتاہیوں کے لئے معافی مانگیں اور اس مشکل سے نکلنے کے لئے مدد کی درخواست کریں؟
کہا: رَبَّنَا لاَ تُؤَاخِذْنَا إِن نَّسِينَا أَوْ أَخْطَأْنَا رَبَّنَا وَلاَ تَحْمِلْ عَلَيْنَا إِصْرًا كَمَا حَمَلْتَهُ عَلَى
الَّذِينَ مِن قَبْلِنَا رَبَّنَا وَلاَ تُحَمِّلْنَا مَا لاَ طَاقَةَ لَنَا بِهِ وَاعْفُ عَنَّا وَاغْفِرْ لَنَا وَارْحَمْنَآ أَنتَ مَوْلاَنَا
اے پالنے والے, اگر ہم بھول گئے یا غلطی کر گئے، ہمیں سزا نہیں دینا!
اے پالنے والے, ہم پر ذمہ داریوں کا سنگین بوجھ نہیں ڈالنا جس طرح (گناہ و طغیانی کرنے والوں پر) ہم سے پہلے لوگوں پر ڈالا!
اے پالنے والے, جسے تحمل کرنے کی طاقت نہیں رکھتے ہیں اسے ہمارے لئے مقرر نہیں کرنا! اور ہمارے گناہوں کے آثار کو دھو ڈالنا! ہمیں معاف کرنا اور اپنی رحمت میں جگہ دے! تو ہمارا مولا و سرپرست ہو، (بقره آیه ۲۲

Post a Comment

0 Comments